The Poem Of Light

تم آئے ہو، نہ شبِ انتظار گذری ہے
تلاش میں ہے سحر بار بار گذری ہے
فیض